dr-zahid-chauhan

ڈاکٹر زاہد چوہان

ڈاکٹر زاہد چوہان

پاکستان کا مطلب کس کو نہیں پتہ بلکہ جس کو بھی پتہ چلا اس کا سر فخر سے بلند ہوا ہے۔ پاکستانی کہیں بھی ہو کس حال میں ہو ں جس حال میں بھی ہو ں کوئی نہ کوئی معرکہ مار لیتے ہیں۔یہ کہانی ہے ایک ایسے ہی پاکستانی کی جس کا نام ڈاکٹر زاہد چوہان ہے۔ڈاکٹر زاہد چوہان کا نا م ملکہ الزبیتھ کی نئے سال کی اوہنر لسٹ میں آیا ہے۔ان کا شمار اب آفیسر آف دی برٹس ائمپائیر میں ہو تا ہے۔یوکے میں رہتے ہوئے ان کا ایک کارنامہ جو اُنہوں نے بے گھر لوگوں کی مدد کا سلسلہ شروع کیااسی وجہ سے کوئین نے ان کو اس عہدے سے نوازا ہے۔
اوبی ای یوکے کا سب سے بڑا ایواڈ ہے ارو یہ ان لوگوں کو دیا جاتا ہے جو معاشرے میں آرٹس، سائنس اور معاشرتی کاموں میں زبردست کام کرتے ہیں۔ڈاکٹر زاہد چوہان کا تعلق میر پور آزاد کشمیر سے ہے۔ ان کا بچپن سے بے گھر افراد کی خدمت کر نا تھا اس موقع پر بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا

ڈاکٹر زاہد چوہان

میں ایک بے گھر آدمی سے ملا جو کہ داننوں کے درد میں مبتلا تھا اور پیسے نہ ہونے کی وجہ سے اپنا علاج نہیں کروا سکتا اور اُس وجہ سے وہ اپنے دانت روٹی بنانے والے چمٹے سے نکال رہا تھا۔ یہ سب دیکھ کر مجھے بہت افسوس ہوا اور اسی دن میں نے بے گھر افراد کی خدمت کا سوچ لیا۔

کا کہنا ہے کہ وہ اپنے دوستوں، گھر والوں اور رشتے داروں کیبہ شکر گذار ہیں جنہوں نے اس نیک کا م میں انکا ساتھ دیا۔ان کا مزید کہنا تھاکہ
(جب آپ کو اتنا اعزاز ملتا ہے تو آپ کو اپنی اوقات نہیں بھولنی چاہیے اور خاص طور پر ان لوگوں کا جواس سفر میں آپ کے ساتھ چلتے ہیں میں ہر اس بندے کا شکر گذار ہوں چاہے وہ میڈیکل سے ہے یا کسی بھی طبقے سے جسں نے میرا ساتھ دیا)۔
اس جذبے کو آگے بڑھتے ہوئے اُنہوں نے یوکے میں ایک ادارہ بے گھر دوست بنایا ہے جس کا بنیادی مقصد بے گھر لوگوں کو گھر جیسا ماحول دینا ہے۔
ڈاکٹر زاہد جیسے لوگ پاکستان کے ساتھ اپنے ما ں باپ کا نا م بھی روش کرتے ہیں اور ثابت کرتے ہیں کہ میں ہو ں ہنر مند پاکستان کا ترجمان

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں