مریم اورنگ زیب

مریم اورنگ زیب

پاکستان مسلم لیگ کی رہنما مریم اورنگ زیب کا کہنا ہے کہ حکومت صرف ڈرامے لگاسکتی ہے جبکہ دوسری طرف پی ٹی آئی کے صوبائی وزیر نعمان احمد کا کہنا ہے کہ مریم اوررنگ زیب صرف بیان دینے کی تنخواہ لیتی ہیں۔مریم اورنگ زیب کا مزید کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن سے وفاداری میر ے خون میں شامل ہے۔ سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ محتر مہ کس وفاداری کی بات کر رہی ہیں ان کی والدہ طاہرہ اورنگ زیب جو کسی بھی تعارف کی محتاج نہیں نوازشریف کی جلاء وطنی کے دوران یہ مشرف صاحب کے ساتھ شامل ہوگی تھی بقول ان کی والدہ کے ہی نواز شریف کر پٹ تھا جس کے آج وہ قصیدیں پڑھتی ہیں۔

مریم اورنگ زیب

آج کل مریم اورنگ زیب کے جو حالات ہیں لگتا ہے کہ اان کی والدہ انڈوں کا صدقہ نہیں دیتی۔ انکا مزید کہنا ہے جتنے پیسے گورنر ہاؤس کی دیواریں توڑنے پر خرچ کئے گئے کاش کہ اتنے پیسے میرے ہونٹوں پر لگتے تومیں سچ میں مونا لیزا بن جاتی حالانکہ فواد چوہدری نے انہیں راکھی ساونت کہہ دیا تھا جس پر مریم نے کہ تھا مجھے راکھی پسند ہے۔ مریم اورنگ کا کہنا ہے کہ اس وقت کاروبار بند، صنعت بند سرمایہ کاری بند مگر میرا منہ بند نہیں ہوگا اس سلیکٹڈ وزیراعظم کے لئے۔انکامزید کہنا تھا کہ پرویز رشید اور عظمی بخاری کو نوٹس جاری کر نا عمران خان کی غنڈہ گردی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

مریم اورنگ زیب اور امی جان
                                                                                                 مریم اورنگ زیب

یاد رہے کہ سب لوگ یہ بات جانتے ہیں کہ مر یم اوررنگ زیب نے رونے کی باقاعدہ کلاسز لی ہیں کبھی تو نواز شریف کی طرف دیکھ کر روتی ہیں تو کبھی شہباز شریف کو دیکھ کر اور کبھی جوش خطابات میں نواز شریف کو رگڑا لگا دیتی ہیں تو چور جیسے الفاظ ان کی شان میں کہہ کر گستاخی کرتی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں