گٹکا فروشی میں ملوث پولیس افسران و اہلکاروں کی رپورٹ طلب

کراچی: سندھ ہائی کورٹ نے سندھ میں گٹکااور مین پوری کی فروخت میں ملوث پولیس افسران واہلکاروں کے حوالے سے ایڈیشنل آئی جی کراچی کو6 ہفتے میں رپورٹ پیش کرنے کا حکم جاری کر دیا ہے ۔

درخواست گزار سجادی بیگم نے کہا کہ میرے2 بھائی گٹکے کی وجہ سے دُنیا سے رُخصت ہوگئے، میں نہیں چاہتی کہ مزید کسی کا پیارا اس وجہس ے مر ے ۔اس کیس کی سماعت جسٹس صلاح الدین پنہور پرمشتمل سنگل بینچ کے روبرو سندھ ہوئی.

درخواست دینے والی خاتون نے کہا کہ ایس ایس پی رینک کے افسران بھی گٹکے فروخت جیسے گندے کام میں‌ملوث ہیں، عدالت نے سیکریٹری قانون کو گٹکے پر پابندی سے رپورٹ جمع کرانے کی ہدایت جاری کر دی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں