سشانت سنگھ راجپوت کی پوسٹ مارٹم رپورٹ میں‌قتل کا انکشاف

ایچ پی ٹائمز (کلچر ڈیسک) : خودکشی سے اپنی زندگی کو ختم کرنے والے بھارتی اداکار سشانت سنگھ راجپوت کا کیس ایک نیے موڑ پر آیا ہے۔

پوسٹ مارٹم کے ایک عینی شاہد نے چونکا دینے والا دعویٰ کیا ہے کہ اداکار سشانت سنگھ راجپوت نے خودکشی نہیں کی تھی بلکہ ان کو قتل کیا گیا۔

روپ کمار شاہ جو اس کیس کے عینی شاہد ہیں‌ نے بتایا کہ جس دن سشانت سنگھ راجپوت کی زنگی ختم ہوئی تو ہمیں اس دن کووپر اسپتال میں پوسٹ مارٹم کے لیے 5 لاشیں ملیں، ان ایک لاش کسی وی آئی پی شخص کی تھی۔

عینی شاہد عینی شاہد نے بتایا کہ ہم جب پوسٹ مارٹم کررہے تھے تو ہمیں پتہ چلا کہ وہ اداکار سشانت سنگھ کی لاش تھی اور اداکار کے جسم پر کئی نشانات بھی موجود تھے ، اداکار کی گردن پر بھی نشانات تھے۔

پوسٹ مارٹم کرنے والوں‌ نے بتایا کہ ہم نے پہلی بار سشانت سنگھ کی لاش دیکھ کر اپنے سینئرزکو بتایا کہ یہ خودکشی نہیں قتل کا معاملہ ہے۔ لیکن ہمارے سینئرز نے روک دیا اور کہنے لگے کہ صرف لاش کی تصاویر لے لو اور جلد از جلد لاش پولیس کے حوالے کر دو۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں